Quarantine Biryani & Other Recipes (Urdu)

 

قرنطنیہ بریانی اور دیگر پکوان

ایک اناڑی باورچن کی ترکیبیں

 

 

 

قرنطنیہ بریانی

(ایک معصوم چھوٹے بھائی کی داستانِ  رقیق)

میں پونہ میں اپنی بہن کے ساتھ رہتا ہوں۔ ماسٹرز کے لیے یہاں آیا ہوں۔ اور جب سے آیا ہوں، کسی نہ کسی وجہ سے گھر آبائی شہر جانا ٹلتے جا رہا ہے۔ سوچا تھا کہ فائنل فرسٹ سمسٹر کے ایگزامز ختم ہوتے ہی گھر چلا جاؤں گا، مگر نا! کورونا نے اس سے پہلے ہی گھر جانے کے تمام راستے بند کر دیے تھے۔

گھر پر شبِ برات منائی تھی۔  گھر پر رمضان  گزار رہے ہیں ۔ تراویح  بھی گھر پر ہو رہی ہےاور اب گھر پر عید بھی ہوگی۔۔۔ وائرس ہم سب کو اپنی انگلیوں پر نچا رہا ہے۔

شبِ برات کو آپا نے بریانی بنائی تھی ۔سبزیوں کی بریانی کیوں کہ گھر سے باہر قدم رکھنا اور گوشت کھانا دونوں فی ا   لحال منع ہے۔جو کام بی جے پی نہ کر سکی، وہ کورونا نے کر دکھایا۔

پتا نہیں آپا واقعی اچھا کھانا بناتی ہیں  یا غلطی سے بریانی اچھی بن گئی تھی۔ دل چاہ رہا تھا کہ آپا کے ہاتھ چوم لیے جائیں یا دل کھول کر تعریف تو کر ہی لینی چاہیے لیکن وہ ویسے ہی اکڑو ہیں۔ خوامخواہ مزید پھیل جاتیں۔ اس لئے خاموش رہا۔

لیکن نا۔۔۔

آپا نے پوچھ پوچھ کر ناک میں دم کر دیا ۔ “بریانی کیسی بنی ہے؟ “

میں نے تعریف کر دی۔ اچھی تو واقعی تھی۔اور پھر زبردستی میری بال نوچ نوچ کر مجھ سے ترکیب بھی لکھانے کی کوشش کی لیکن میں کالج کے اسائنمنٹ کا بہانہ کر کے جان بچا گیا۔

لیکن آپا ہٹ دھرم بھی ہیں۔ اپنی مرضی کر کے رہیں۔ یہ رہی قرنطنیہ بریانی کی ترکیب۔

قرنطنیہ بریانی کے اجزاء  اور ترکیب

تین پیالی چاول یاپھر جتنے آپ کو بنانے ہوں، لیکن پھر باقی اجزا کا تناسب بھی برقرار رکھیے گا۔ کچھ بگڑا تو ذمہ داری میری یا آپا کی نہیں۔

بہت بڑی سی ایک عدد پیاز۔ اگر بہت بڑی دستیاب نہ ہو تو میڈیم سائز کی دو تین پیاز  بھی لے سکتے ہیں۔ اس ترکیب میں کوئی قید نہیں۔جو مل گیا اسی کو مقدّر سمجھ لیجیے۔ جو نہ ملا اس کو بھلاتے چلے جائیے۔

دو درمیانے سائز کے ٹماٹر- کوشش کیجیے کہ نرم یا گلے ہوئے نہ ہوں۔

ایک عدد بڑا سا آلو۔ چھیل کر اس کے خوب صورت سے چوکور ٹکڑے بنا لیجیے۔ مجھے آلو بہت پسند ہے۔ اچھا ہوا کہ آپا نے آلو ڈالنے میں کنجوسی نہیں کی۔

ایک عدد لیموں۔کیوں کہ دہی  نہیں تھا۔ اگر ہو تو وہ ڈالیے، لیکن لیموں مت ڈالیے گا ورنہ کھٹاس سے دانت  چمک نہ جائیں۔

پالک کے کچھ پتے۔ ڈنڈی نکال لیجیے۔ خوامخواہ بریانی میں کچرا لگے گا۔

پیسا ہوا گرم مصالحہ دو چمچہ۔ کھڑا گرم مصالحہ نہیں تھا۔

ایک چٹکی جائفل جاوتری ۔ یہ بھی ہمارے گھر موجود نہیں تھی۔ آپا نے خود ہی کہا کہ ضروری نہیں ہے۔پتہ نہیں پھر ترکیب میں لکھوانے کی کیا ضرورت ہے؟

ایک چھوٹا چمچہ زیرہ۔ مجھے زیرہ نہیں پسند۔ آپ کو بھی ناپسند ہو تو مت ڈالیے۔

دو کھانے کا چمچہ کوٹی ہوئی ادرک۔

لہسن کی دو ڈلیاں صاف چھیلی ہوئی۔ یہ بہت اہم ہے۔ یہ کام میں نے کیا تھا اور میرا قوی خیال ہے کہ بریانی کا اصل ذائقہ دراصل ان لہسنوں کی وجہ سے آیا۔

کچھ ہری مرچیں۔ آپا نے انہیں بڑی صفائی سے لمبائی میں کاٹا تھا۔یوں بھی  ٹکڑے کر کے ڈالنے سے ذائقہ میں کوئی فرق آنے کی امید نہیں۔ مرضی ہے آپ کی۔

ہرا دھنیا ڈھیر سارا۔ میں اس پر اعتراض کرنا چاہتا تھا۔ لیکن آپا نے چپ کرا دیا۔ “پہلے ہی پودینہ نہیں ہے۔ ہرا دھنیا بھی نہ ڈالا تو بریانی کیسی؟”

ایک پیالی نمک کے پانی میں بھیگے ہوئے سویابین chunks۔ chunks کی اردو نہ مجھے آتی ہے نہ آپا کو۔ اناڑی پکانے  والوں کی  یہی پہچان ہے۔ آپا کا ماننا ہے کہ سویابین سبزی خوروں کا گوشت ہے، ذائقہ  میں بھی اور  دیکھنے میں بھی۔اگر آپ آنکھ بند کرکے سویا بین چبائیں تو گوشت کا سا ذائقہ اور احساس ہوگا۔

بہت سارا تیل۔ اور نمک حسبِ ذائقہ۔

چاول کے علاوہ باقی ساری چیزوں کو برتن میں ڈال کر  خوب اچھی طرح پھینٹ دیجیے۔ چاہیے تو کچھ وقت اسے ایسے چھوڑ دیجیے تاکہ سارے اجزا آپس میں گھل مل جائیں۔ یک جہتی میں بڑی طاقت ہے۔

اگر آپ زیادہ محنتی ہیں، اس بات میں مجھے شک ہے، تو سویابین چنکس کو تل لیجیے۔اس سے صرف آپ کی زبان کو اصلیت پتہ چلے گی۔ بصارت تو ضرور دھوکا کھا جائے گی۔یہ بالکل بون لیس چکن کی طرح نظر آتے ہیں۔ دل کے بہلانے کو۔۔۔ ہک ہاہ۔۔۔

آگے کی ترکیب پڑھنے کے لیے یہاں جائیے۔

Advertisements

Your comments and opinion matter. Please leave a message. Cheers!