Drama Review Urdu | Mere Humsafar | Episode 19

میرے ہمسفر قسط۱۹ کا تحریری جائزہ

شاہ جہاں نے شفق سے کہا ہے کہ وہ ہالہ اور خرم کو اکٹھا کرنے میں اس کی مدد کرے، لیکن شفق خرم کے ساتھ اپنی منگنی کے بارے میں بتاتا ہے۔ مختصر جواب: جواب نہیں ہے۔

حمزہ ہالہ کو زندگی میں اعتماد کا احساس دلانے میں کامیاب ہے۔ شاپنگ کے بعد وہ اسے اپنے دوست کے فارم ہاؤس میں بھی لے جا رہا ہے۔ شاہجہاں اس کی اجازت نہیں دیتی، کیا وہ ہالہ کو کبھی خوش رہنے دے گی؟ مجھے اس پر شک ہے۔

شاہ جہاں نے حنا کو فون کیا اور بتایا کہ سمین حمزہ میں دلچسپی رکھتی ہے، اس لیے یہ تجویز اس کے ساتھ کی گئی ہے۔ یہ ایک افراتفری کی طرف جاتا ہے، جس کے بعد لاؤنج میں عدالتی سیشن ہوتا ہے۔ رفعت بیگم اپنا غصہ کھو دیتی ہے، اور رئیس شاہ جہاں کو تھپڑ مارتا ہے۔ کیا یہ دوسری بار نہیں ہوا؟ شاہ جہاں گھر چھوڑنا چاہتا ہے، لیکن حمزہ پہلے ہی چھوڑ چکا ہے، جس سے وہ بہت پریشان ہے۔ منظر کافی گھسیٹا ہوا تھا۔

رفعت بیگم شاہ جہاں کے بارے میں بتاتی ہیں، “نہ کھیلیں گے، نہ کھیل دیں گے۔

اسپاٹ آن!

حمزہ اور ہالہ کے درمیان رومانس صرف اففف تھا… چمکدار اور پھر بھی پیارا… مجھے محبت کا اعتراف پسند تھا۔ اتنا پیارا تھا۔ وہ دونوں لاجواب نظر آتے ہیں اور لڑکے ان کی کیمسٹری چارٹ سے دور ہے۔

مجھے سب سے زیادہ پسند یہ ہے کہ حمزہ صرف ایک رومانوی شوہر نہیں ہے۔ جب دوسرے رشتوں خصوصاً اس کی ماں کی بات آتی ہے تو وہ بہت سمجھدار اور متوازن بھی ہے۔ حمزہ کو سلام…

بات ختم، قصہ ختم.

~

~

Until we meet again, check out my books on Amazon. You can subscribe for Kindle Unlimited for free for the first month, just saying 🙂

 

Shabana Mukhtar